24 دسمبر 2017

منشیات کی علت کا کنسلٹنٹ: ۶۲ لاکھ مصری شہری منشیات استعمال کرتے ہیں

منشیات کے علاج معالجے اور نفسیات کے کنسلٹنٹ ایہاب الخراط کہتے ہیں کہ نشہ آور موادوں کی علت کے معیاروں کے مطابق  مصر کے ۶ عشاریہ ۲ فیصد شہری نشہ آورموادوں کی علت کا شکار ہیں ۔

''صدائے بلد'' سیٹلائیٹ چینل پر منگل کی رات ''صلات التحریر'' نامی پروگرام میں بات کرتے ہوئے الخراط نے وضاحت کی کہ اس میدان میں کی جانے والے تازہ ترین تحقیق حال ہی میں شایع ہوئی ہے۔ انہوں نے وضاحت کی کہ اس تحقیق میں مصرکی تمام گورنوریٹس سے تعلق رکھنے والے ۱۰۰۰۰۰ مصری شہریوں  کا مطالعہ کیا گیا اورپایا گیا کہ ان میں سے ۶ عشاریہ ۲ فیصد نشہ آورمواد استعمال کرتے ہیں۔

دوسری جانب ، الخراط نے صراحت کی کہ ۲۰۱۱ میں ۳۰ لاکھ مصری شہری منشیات استعمال کر رہے تھے ۔ انہوں نے ساتھ ہی اس کی بھی وضاحت کی کہ الکحل کی علت میں مبتلا ممالک میں امریکہ سب سے آگے ہے ۔ منشیات کے استعمال کی شرح فیصد ۵ سے ۸ فیصد کے درمیان ہے اورمصر اس شرح فیصد کے وسط میں ہے۔

یاد رہے کہ منشیات اور منظم جرائم کے خلاف لڑنے والے ادارے اور سوئز کینال کے تحفظ کے ذمہ دار جنرل ڈائریکٹوریٹ کے تعاون سے  ایک تجارت کشتی کے کنٹینر میں موجود تیس لاکھ اور ۷۵۰۰۰۰ نشہ آور گولیوں کو سمگل کرنے کی کوشش کو ناکام بنا دیا  گیا۔

مزید نتائج لوڈ کررہا ہے۔